مریم نواز جب رش میں جاتی ہیں تو لیگی کارکن ان کے ساتھ کیا کرتے ہیں، ایسی رپورٹ جو نوازشریف کو پریشان کردے گی

تین بار ملک کا وزیراعظم رہنے والے نوازشریف کی صاحبزادی مریم نواز سے بھیڑ میں لوگوں کا سلوک ہرآئے روز ایک نئے ہی واقعے کو جنم دے رہا ہے۔ کبھی گھونسا، کبھی ڈنڈا ، کبھی غیر مناسب انداز میں چھونا تو کبھی سر سے کسی چیز کا آٹکرانا ۔

یہ سب کچھ کس طر ح سے اور کیوں ہورہا ہے۔ کہتے ہیں کہ سیاست کی منزل بھلے ہی بڑی رنگین اور دلفریب ہے لیکن اس منزل تک پہنچنے کا راستہ کانٹوں سے بھرا ہوا ہے۔ سیاست میں نعرے بھی لگتے ہیں۔ اور دھکے بھی، تالیاں بھی بجتی ہیں اور گالیاں بھی سننے کو ملتی ہیں۔ اقتدار کا تخت و تاج بھی میسر ہوجاتا ہے اور جیل کی ہوا بھی کھانی پڑتی ہے۔ لیکن مریم نواز کے معاملے میںتو پیش آئے واقعات غیر معمولی بھی ہیں اور اپنے آپ بھی منفرد بھی ۔پچھلے صرف تین چار سالوں میں ہی ملکی سیاست میں اپنا سکہ جمانے والی مریم نواز بھلے ہی اس وقت کی لیڈر شپ میں اپنا کوئی ثانی نہیں رکھتیں۔ دھواں دار تقریریں ہوں۔ انتہائی بے باک اور سخت لہجےکا استعمال ہو۔اپنے مخالفین کو للکارنے کا دم خم ہو یا پھر اپنے حریفوں کی اینٹ سے اینٹ بجا دینے کا عزم ۔

مریم نواز اس وقت ملک کے اعلیٰ ترین عہدے پر فائز شخصیات کی آنکھوں میںآنکھیں ڈال کر بات کرنے والی سب سے نڈر خاتون سیاستدان ہیں۔ مریم نواز کو اس بات کا بخوبی احساس ہے کہ وہ ہر محفل میں مرکز نگاہ ہوتی ہیںاور اب ان کے بغیر ملکی سیاست کارنگ پھیکا پھیکا سا لگتا ہے۔یہی وجہ ہے کہ وہ ایک سٹائل اور فیشن آئیکون کے طور پر بھی خود کو نمایاں رکھتی ہیں اور اپنے ملبوسات اور مخصوص انداز پر ان کا خاص دھیان رہتا ہے۔

اس میں بھی کوئی شک نہیں کہ نہ صرف سوشل میڈیا پر ان کی فین فالوونگ بے پناہ حد تک بڑھ چکی ہے بلکہ سیاسی جلسوں اور ریلیوں میں موجود عوام کا جم غفیرمریم نواز کی لوگوں میں پسندیدگی اور بڑھتی ہوئی مقبولیت کا پتہ دے رہا ہوتا ہے۔ لیکن انھی جلسوں ، ریلیوں ، پیشیوں اور پریس کانفرنسوں کے دوران پے درپے کچھ ایسے واقعات بلکہ یوں کہیے کہ حادثات پیش آرہے ہیں جن میں مریم نواز خاص نشانے پر آئی ہوئی ہیں۔ ایک بار راہداری میں چلتے ہوئے ایک ٹی وی کیمرہ مین کا کیمرہ مریم کے سر سے ٹکرا گیا۔اس ٹکرائو سے یقینی طور پر مریم نواز کو تکلیف پہنچی لیکن انھوںنے کوئی ر د عمل ظاہر کرنے سے گریز کیا۔ یک بار مسلم لیگ (ن) کے کارکنوں کے ہجوم میں گھر جانےکے دوران ایک شخص نے اپنی پوری طاقت سےمریم نواز کے کندھے پر گھونسا دے مارا۔مریم نواز کو ان کے خاوند کیپٹن (ر)صفدر اعوان نے اپنے حصار میں لے رکھا تھا۔لیکن پھر بھی ایک شخص کو نہ جانے کیا سوجھی کہ اپنی کہنی کا پورا زور لگاتے ہوئے مریم بی بی کےکندھے پر وار کیا۔ لیکن پیر سات دسمبر 2020 کو تو حد ہی ہو گئی۔ جب ورکرز ریلی کے دوران مریم نواز کو ایک شخص نے ایسے عجیب و غریب اور قابل اعتراض انداز میں کمر پر ہاتھ پھیرا کہ خود مریم نے بھی اس چھوون کوغیر معمولی محسوس کرتے ہوئے پلٹ کر دیکھا۔ لیکن اس اثنا میں ان کی سکیورٹی پر مامور ذمہ داران اس شخص کی اچھی خاصی درگت بنا چکے تھے۔ چنانچہ اس بار بھی انھوںنے اس حرکت پر اپنےکسی جوابی عمل سے اجتناب برتا۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں