پوری اپوزیشن اور تمام اتحادی بھی استعفے دے دیں تو حکومت نہیں گر سکتی کیونکہ قانونی طور پر کتنے ایم این ایز اسمبلی میں ہوں تو اسمبلی قائم رہ

اسلام آباد(ویب ڈیسک) پاکستان پیپلزپارٹی کے رہنما سینئر بیرسٹر اعتزازاحسن نے اپوزیشن کے تمام خوابوبں کو تؤر دیا ان کا کہنا ہے کہ اسمبلی تحلیل کرنے کےلیے 342 میں سے 275 سے 300 استعفے چاہییں نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ کہ اپوزیشن اگر تہیہ کر لے کچھ بھی کر سکتی ہے لیکن اسمبلی تحلیل کرنے کےلیےقانونی تقاضے بھی پورے کرنا ہوں گے۔

انہوں نے بتایا کہ آئین کے مطابق 84 ایم این ایز اسمبلی میں جب تک ہوں اسمبلی تحلیل نہیں ہوسکتی۔ اسمبلی میں اگر 66 تک ایم این ایز بھی ہوں تو کوئی ایم این اے جب تک کورم کی نشاندہی نہ کرے تب تک کارروائی چلتی رہے گی۔انہوں کہا کہ پی ڈی ایم کے استعفے دینے سے عمران خان کو سینیٹ الیکشن میں فائدہ ہو گا اور وہ اپنی مرضی سے سینیٹ میں جیت سکتی ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ سندھ حکومت چھوڑنا بہت بڑی قربانی ہوگی۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں