سعودی عرب نے بڑا بھائی بن کرایک بار پھر لاکھوں نادار پاکستانیوں کی بڑی امداد کر دی

سعودی عرب نے بڑا بھائی بن کرایک بار پھر لاکھوں نادار پاکستانیوں کی بڑی امداد کر دی

ریاض(ویب ڈیسک ) سعودی عرب پاکستان کا سچا اور دیرینہ دوست ہے۔ جس نے ہر مشکل گھڑی میں پاکستان اور پاکستانی عوام کی مدد کی ہے۔ چاہے وہ جنگ کا موقع ہو یا کوئی قحط، آفت یا دہشت گردی کی جنگ۔ سعودی حکومت کی جانب سے ہر موقع پر پاکستان کو اخلاقی، سفارتی اور مالی امداد
مہیا کی گئی ہے۔ اسی وجہ سے پاکستان اور سعودی عرب کی دوستی لازوال ہے۔سعودی حکومت نے ایک بار پھر بڑے بھائی کا کردار ادا کرتے ہوئے رمضان المبارک کے لیے پاکستان کے لاکھوں نادار افراد کے لیے بڑی امدد کر دی ہے۔ تفصیلات کے مطابق سعودی شاہ سلمان کے فلاحی امدادی ادارے کی طرف سے 20700 فوڈ پیکیج کی تقسیم شروع کی جارہی ہے جس سے ماہ رمضان میں صوبہ بلوچستان کے تقریباً 1 لاکھ 24 ہزار سے زائد افراد مستفید ہوں گے اس فوڈ پیکج میں تمام تر ضروری اشیاء خردونوش شامل ہیں۔ایک فوڈ پیکج 41 کلوگرام پر مشتمل ہے جس میں 20 کلو فائن آٹا ،5 کلو چاول ، 5لیٹر کوکنگ آئل ،2 کلو بیسن ،2 کلو کھجور ،5 کلو چینی اور 1 کلو چائے اور جام شیریں شامل ہیں۔جس کا مجموعی وزن (850) ٹن بنتا ہے اور مالیت1 ملین ڈالر (تقریباً 15 کروڑ 56 لاکھ روپی) ہے جو کہ این ڈی ایم اے ، مقامی حکومت اور مقامی این جی
او (SDO) کے تعاون سے صوبہ بلوچستان کے 10 اضلاع ( دکی، چاغی ،واشک،پنجگور،نصیر آباد، خاران، صحبت پور، سبی ، لورالائی) میں شفاف طریقے سے تقسیم کیاجائے گا۔اس حوالے سے ایک تقریب کا انعقاد کیا گیا۔ جس سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر برائے دفاعی پیداوار زبیدہ جلال نے کہا ہے کہ ماہ رمضان اور حالیہ کورونا وباء کے دوران غریب کی مدد کرنا ہماری اخلاقی ذمہ داری ہے، سعودی عرب کی جانب سے بلوچستان کے 10اضلاع کیلئے فوڈ پیکیج خوش آئند اقدام ہے۔وہ گزشتہ روزکو شاہ سلمان کے فلاحی امدادی ادارے (KS Relief)کی طرف سے فوڈ پیکیج کی تقسیم کے حوالہ منعقدہ تقریب سے خطاب کررہی تھیں ۔اس موقع پر سعودی سفیر نواف سعید المالکی اور پاکستان میں کے۔ ایس ریلیف کے ڈائریکٹر ڈاکٹر
خالد بھی موجود تھے۔سعودی سفیر نواف المالکی نے اس موقع پر کہا کہ پاکستان اور سعودی عرب کے برادرانہ تعلقات ہر طرح کے حالات میں مضبوط رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ امداد دو طرفہ مضبوط تعلقات کی علامت ہے اور یہ تعلقات ہمیشہ مضبوطی سے آگے بڑھتے رہیں گے۔کورونا وبا کے دوران پاکستانیوں سمیت سعودی عرب میں مقیم غیر ملکی افراد کے مسائل سے آگاہ ہے اور ان کے لئے سعودی حکومت اقدامات اٹھا رہی ہے۔ انکا کہنا تھا کہ پاک سعودی عرب تعلقات صرف دو حکومتوں نہیں بلکہ دونوں ممالک کے عوام کے درمیان مظبوط رشتے سے منسلک ہیں۔ یاد رہے کہ حالیہ سعودی امداد NDMA، مقامی حومت اور مقامی این جی او(SDO) ے تعاون سے صوبہ بلوچستان کے 10اضلاع ( دکی، چاغی ، واش، پنجگور، نصیر آباد، خاران، صحبت پور، سبی ، لورالائی) میں شفاف طریقے سے تقسیم کی جائے گی۔e>

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں