ٹیم تو ہار گئی مگر فخر زمان جیت گیا : غیرملکی کرکٹرز پاکستانی کھلاڑی کے حق میں کھڑے ہو گئے

ٹیم تو ہار گئی مگر فخر زمان جیت گیا : غیرملکی کرکٹرز پاکستانی کھلاڑی کے حق میں کھڑے ہو گئے

لاہور(ویب ڈیسک) دوسرے ون ڈے میں فخر زمان کے متنازعہ رن آوٹ پر غیر ملکی کرکٹرز نے بھی حیرت کا اظہار کر دیا ، کوئن ٹن ڈی کوک کے رویے کو کرکٹ فینز کے ساتھ ساتھ دیگر کرکٹرز اور مبصرین نے بھی تنقید کا نشانہ بنایا ۔ویسٹ انڈیز کے کھلاڑی ردر فورڈ



نے لکھا کہ جینٹل مین گیم میں ایسا نہیں ہونا چاہیے ۔ آسٹریلیا کی سابق کرکٹر لیزا اسٹالیکر نے لکھا کہ امپائرز کو فوری ردعمل دکھانا چاہئے تھا ۔دوسری جانب فخر زمان کی شاندار بیٹنگ پر ملکی اور غیر مکمل کھلاڑیوں نے تعریفوں کے پل باندھ دیے ۔ شاہد آفریدی ، محمد حفیظ ، جے پی ڈیومنی ، جوفرا آرچر اور دیگر کھلاڑیوں نے فخر زمان کی خوب تعریفیں کی ۔پاکستان کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق نے فخر زمان کی اننگز کو شاندار قرار دے دیا ، کہا انہوں نے تن تنہا اتنے بڑے ہدف کے تعاقب میں زبردست شاٹس کھیلیں ، بیٹنگ کوچ یونس خان نے کہا کہ یہ ان کی لائیو کرکٹ کی سب سے بہترین اننگز تھی جبکہ بابر اعظم اور امام الحق نے فخر زمان کی 193 رنز کی اننگز کو ون مین شو قرار دیا ۔خیال رہے کہ پاکستان ٹیم میچ تو ہار گئی ، لیکن فخر زمان کے 193 رنز کی اننگز نے سب کے دل جیت لئے ، اوپننگ بلے باز کی دھواں دار اننگز میں 18 چوکے اور 10 چھکے شامل رہے ، فخر زمان نے دوسری اننگز میں انفرادی طور پر سب سے زیادہ اسکور بنانے کا ریکارڈ بھی اپنے نام کر لیا ۔










50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں