ہنگامی پریس کانفرنس میں بڑا اعلان! مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما کا مستعفی ہونے کا اعلان، ہلچل مچا دی

ہنگامی پریس کانفرنس میں بڑا اعلان! مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما کا مستعفی ہونے کا اعلان، ہلچل مچا دی

اسلام آباد( نیوز ڈیسک )پاکستان مسلم لیگ (ن) سندھ کے نائب صدر سید عبدالغفور شاہ نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دینے کا اعلان کر دیا۔ ہنگامی پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا مسلم لیگ (ن) سندھ کے صوبائی صدر سید شاہ محمد شاہ کی زیادتیوں کے سبب پارٹی سے دل برداشتہ ہو چکا ہوں۔صوبائی صدر سندھ میں



تنظیم سازی کے سلسلے میں کوئی مشاورت نہیں کرتے بلکہ پارٹی میں اقربا پروری کو جنم دے چکے ہیں اورپارٹی کو مضبوط کرنے کی بجائے سازش کے تحت تباہ کر رہے ہیں۔حال ہی میں تنظیم سازی کے سلسلے میں کیے جانیوالے فیصلے غیرقانونی اور غیرآئینی طور پر کیے گئے، تنظیمی عہدے ایسے افراد کو دیئے گئے ہیں جو پارٹی کو ہمیشہ کمزور بنانے میں مصروف رہے ہیں، اس لئے احتجاجاََ عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان کرتا ہوں۔دوسری جانب پاکستان مسلم لیگ (ن) کے شعبہ یوتھ ونگ میں نامزدگیوں کے ایشو پر لاہور سے قومی اسمبلی کے رکن روحیل اصغر اور ان کے نیچے (ن) لیگی ایم پی اے بائو اختر کے درمیان ٹھن گئی جس سے مذکورہ حلقے میں پاکستان مسلم لیگ (ن) دو دھڑوں میں تقسیم ہو کر رہ گئی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ دونوں دھڑوں کے اراکین قومی وصوبائی اسمبلی کی کوشش ہے کہ ان کے حمایت یافتہ (ن) لیگی کارکنوں کو پارٹی کے یوتھ ونگ میں ایڈجسٹ کیا جائے۔علاوہ ازیں پاکستان مسلم لیگ (ن) کے پارلیمانی بورڈ کا ایک اعلیٰ سطحی اجلاس اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز شریف کی زیر صدارت منعقد ہوا۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) سیکرٹریٹ واقعہ ماڈل ٹائون میں ہونے والے (ن) لیگ کے پارلیمانی اجلاس میں (ن) لیگی رہنما را نا تنویر، خواجہ سعد رفیق اور سمیرا ملک سمیت دیگر رہنمائوں نے شرکت کی۔ اجلاس میں (ن) لیگی ایم پی اے وارث کلو کی وفات پر فاتحہ خوانی کی گئی۔ اجلاس میں خوشاب سے پنجاب اسمبلی کے حلقہ پی پی 84 کے لئے (ن) لیگی امیدوار کی نامزدگی کے حوالے سے مشاورت کی گئی۔










50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں